سلامتی

ضربِ عضب نے ملک بھر میں قیامِ امن میں مدد کی۔

عسکری اور مخبری پر مبنی کارروائیوں نے دہشت گردوں کے لیے سرمائے کے ماخذوں کو کم کرنے میں حصہ ڈالا ہے۔

کے پی پولیس کے 20 افسروں، جن میں سے چند فرض کی راہ میں شہید ہو گئے، نے اعزاز وصول کیے۔

پاکستانی دہشت گردوں نے شناخت کو ناکام بنانے کے لیے ایک سفاکانہ ہتھکنڈا استعمال کرنا شروع کیا ہے۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ آپریشن ضربِ عضب نے عسکریت پسندی میں کمی کرنے میں اپنا حصہ ڈالا ہے۔

پاکستان کے تجارتی دارالحکومت میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے حالیہ ہفتوں میں تقریباً 100 مشتبہ افراد کو گرفتار کیا ہے۔

یونیورسٹی کے طلباء نے گلاب پیش کر کے دہشتگردی کے خلاف لڑائی میں پولیس کی قربانیوں کی پذیرائی کی۔

پاک بحریہ کو نویں مرتبہ اتحادی بحری فوج (سی ٹی ایف-150) کی کمان سونپ دی گئی جو کہ 5 اگست سے موثر ہو گی۔

پاکستانیوں نے دہشتگردوں کے سامنے نہ جھکنے کے عزم کا مظاہرہ کیا۔

حتیٰ کہ حزبِ اختلاف کی جماعتوں کے سربراہان بھی امن کی طرف پیش رفت کی تعریف کر رہے ہیں۔