سائنس و ٹیکنالوجی

فوج اور خیبر ایجنسی کے حکام نے ماہرینِ آثارِ قدیمہ کو ورثہ کی 110 جگہوں کا سروے کرنے میں مدد فراہم کی۔