|

دہشتگردی

کرسمس سے ایک ہفتہ قبل کوئٹہ میں چرچ پر داعش کا حملہ

حکام کا کہنا ہے کہ پاکستانی سیکیورٹی فورسز نے خودکش حملہ آوروں کو چرچ میں داخل ہونے سے روک کر سینکڑوں جانیں بچائیں۔

عبدالغنی کاکڑ

17 دسمبر کو کوئٹہ کے بیتھیل میتھوڈسٹ میموریل چرچ پر داعش خودکش حملہ آوروں نے حملہ کیا، جس میں کم از کم 9 عبادت گزار جاںبحق ہو گئے اور درجنوں دیگر زخمی ہوئے۔ سی سی ٹی وی فوٹیج میں حملہ آور دیکھے جا سکتے ہیں۔ [بشکریہ عبدالغنی کاکڑ]

کوئٹہ— پاکستانی حکام دو ممکنہ ملزمان کی تلاش میں ہیں جو ممکن ہے کہ کوئٹہ کی زرغون روڈ پر چرچ پر ایک مہلک حملہ کر کے فرار ہو گئے ہیں۔

"دولتِ اسلامیہٴ" (آئی ایس آئی ایس) نے اتوار (17 دسمبر) کو بیتھیل میموریل میتھوڈسٹ چرچ پر ہونے والے حملہ کی ذمہ داری قبول کی۔

سول ہسپتال کوئٹہ کے ترجمان ڈاکٹر وسیم احمد نے پاکستان فارورڈ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ نو افراد جاںبحق ہوئے اور 44 دیگر زخمی ہوئے۔